شاعری غزل

جو سر بھی کشیدہ ہو اسے دار کرے ہے ….. احمد فراز

جو سر بھی کشیدہ ہو اسے دار کرے ہے اغیار تو کرتے تھے سو اب یار کرے ہے وہ کون ستمگر تھے کہ یاد آنے لگے ہیں تو کیسا مسیحا ہے کہ بیمار کرے ہے اب روشنی ہوتی ہے کہ گھر جلتا ہے دیکھیں شعلہ سا طوافِ در و دیوار کرے ہے کیا دل کا […]

شاعری غزل

اٹھا رہی ہیں جو سر خواہشیں قلم کردوں …. نسیم شیخ

اٹھا رہی ہیں جو سر خواہشیں قلم کردوں میں یعنی گھر سے نکلنا ہی اپنا کم کردوں میں اپنی ذات کا منکر وہ مجھ سے کہتی ہے میں پڑھ کے عشق کی آیت کو اس پہ دم کردوں یہ اور بات ہے خاموش ہوں وگرنہ میں لگا کے خود کو اپنی آنکھ نم کردوں اترنے […]

مضامین

اردو کی بے راہ روی اور بربادی کا بنیادی سبب …. احمد علی

” اردو کی بے راہ روی اور بربادی کا بنیادی سبب ” وہ زبان جس کی تاریخ دوہزار سال سے اوپر ہے اس زبان کو بگاڑنے ، اسے برباد کرنے میں کس کا ہاتھ ہے ؟ سطحی طور پہ دیکھا جائے تو ہمیں نظر آتا ہے اولا تو رسم الخط کی بنیاد پر ایک متعصب […]

مضامین

میں نے اپنی جانب دیکھا … شاعر: سعید اشعر…. تحریر: ملیحہ سید

میں نے اپنی جانب دیکھا شاعر : سعید اشعرؔ تحریر :ملیحہ سید میں نے اپنی جانب دیکھا میرے اندر جنگل گونج رہا تھا (نظم : کشف سے اقتباس) ہری پور سے تعلق رکھنے والے محمد سعید پر شعر کب اترا، غزل کب مہربان ہوئی ، اس بارے میں ان کا کہنا ہے کہ ’’جب لکھنا […]

شاعری غزل

ستا تا ، ڈرا تا ، رُلا تا ہے مجھ کو …. سبیلہ انعام صدیقی

ستا تا ، ڈرا تا ، رُلا تا ہے مجھ کو اُداسی کا شعلہ جلاتا ہے مجھ کو میں تیار ہر امتحاں کے لیے ہوں مرا حوصلہ آزماتا ہے مجھ کو وہ ماہر ُمصّور بڑے کینوس پر ہر اک زاویے سے بناتا ہے مجھ کو ترے پیار کی جب سے اُوڑھی ہے چنُری گُلستاں گلے […]

شاعری غزل

میں اس لیے بھی گھڑے پر سوار تھا ہی نہیں  …. آزاد حسین آزاد

میں اس لیے بھی گھڑے پر سوار تھا ہی نہیں  کہ میرا کوئی بھی دریا کے پار تھا ہی نہیں یوں تازہ دم ہیں ترے اہلیان شوق اب کے سفر میں جیسےکہیں پر غبار تھا ہی نہیں میں اس جگہ بھی بڑی دیر تک رہا موجود  وہ جس جگہ پہ مرا انتظار تھا ہی نہیں […]

مضامین

سعود عثمانی ۔۔۔ ہمارے عہد کا نمائندہ …… ملیحہ سید

تعارف کرانا پڑے گا؟ مجھے بیس پچیس برس دورِ ماضی میں جاکر یہاں پھر سے آنا پڑے گا تعارف کرانا پڑے گا گذشتہ خد وخال اور حال کو جوڑتا پُل بنانا پڑے گا میں اس راستے سے دوبارہ گزرنا نہیں چاہتا ہوں جو دل میں نے برسوں چھپا کر رکھا تھا وہ پھر سے دکھانا […]